امریکہ میں یوگا کاروبار بڑھ رہا ہے، بھارت میں بھی


Photo: Shutterstock

Photo: Shutterstock

امریکہ میں  یوگا کاروبار بڑھ رہا ہے، بھارت میں بھی

جیسے پیزا اٹلی میں ایجاد کی گئی غذا ہے ،لیکن دنیا بھر میں امریکی ریستوران چین پيزا کو فروخت کر رہےہیں، اسی طرح، یوگا ہندستان کی ایجاد ہے، لیکن اب یہ امریکہ میں بلین ڈالر کاروبار بن گیا ہے اور 100 سال پہلے سوامی وویکانند کی طرف سے پہلی بار بتائی گئی روحانی مشق سے کسی حد تک یہ میل کھاتا ہے۔

امریکہ کی چیپ مین يونورسٹی کے محققین نے امریکہ میں گزشتہ چند دہائیوں میں یوگا کے فروغ پانے کا مشاہدہ کیا ہے۔ اب یہ روحانیت سے زیادہ فٹنس اور علاج سے وبستہ ہو چکا ہے۔ محققین کا خیال ہے کہ اس کی وجہ یہ ہے کہ ایک تو یوگا گرو اسی طرح تربیت یافتہ ہو رہے ہیں اور امریکی یوگا مارکیٹ میں بڑے اور چھوٹے حریف کے درمیان برانڈنگ کو لے کر مقابلہ جاری ہے۔

جرنل آف مارکیٹنگ میں شائع اس تحقیقی رپورٹ > میں اركاول ڈیٹا جیسے 1980 سے 2012 کے درمیان نیو یارک ٹائمز اور دی واشنگٹن پوسٹ میں یوگا پر شائع مضامین وغیرہ کا مطالعہ کیا گیا ہے۔ اعداد و شمار میں شرکاء کے وال كنو اور انٹرویو کو بھی شامل کیا گیا ہے۔
href=”https://blogs.chapman.edu/press-room/2015/04/29/chapman-university-research-on-the-yoga-market-from-1980-to-the-present-shows-how-meanings-and-practice-of-yoga-changed-as-it-was-adapted-by-the-u-s-markettarget

تحقیقی رپورٹ کے شریک مصنف اور اسسٹنٹ پروفیسر گوكن كسكنر-بیلی نے کہا کہ ‘’’ہم نے پایا کہ امریکی یوگا بازار میں جو کمی آئی ہے ان کی وجہ سے بہت سے مختلف قسم کی رقم ابھرنا تو ہے ہی، یہ دلیل بھی ہے کہ لوگ یوگا کیوں کریں۔

1893 میں عالمی مذہبی کانفرنس میں سوامی وویکانند کی طرف دیے گئے خطاب میں امریکہ میں پہلی بار یوگا کا تعارف پیش کیاگیا تھا۔ اس کے بہت دیر بعد تک امریکہ میں یوگا کی تشہیر نہیں ہوئی ،اسے لے کر کوئی معجزہ جیسا ماحول بنا ہوا تھا، لیکن 1960 کی دہائی میں لوگوں نے اس بارے میں مناسب طریقے سے جانا۔ 70 کی دہائی میں یوگا قائم ہوا اور لوگوں نے اسے دل اورجسم کی طبی ضرورت سمجھا خاص طور سے نوجوانوں کو منشیات کےمسئلہ سے بچانے کا ذریعہ بھی۔

تاہم یوگا پہلے روحانی احساس سے منسلک تھالیكن پھر لوگوں نے اسے طبی ضرورت میں شامل کر لیا اور درد اور زخموں سے نجات حاصل کرنے کا ذریعہ بنایا. پھر فٹنس سے جوڑ كر یہ مختلف کھیلوں میں بہتر کارکردگی کے لیے فائدہ مند بتایاگیا۔ یوگا کے فوائد سے منسلک صحت کےتجربے کا اعلان ہونے پر 90 کی دہائی میں یوگا فٹنس پہلو نے زور پکڑا۔یوگا مقبول ہو گیا اور مرکزی دھارے میں آ گیا جب نائكي، ایپل اور یچ بی او جیسی کمپنیوں نے آن سائٹ یوگا کلاس شروع کر دیں۔

2001 میں 4.3 ملين یعنی 43 لاکھ امریکی یوگا کی مشق کر رہے تھے جبکہ اب 20.4 ملین امریکی یوگا کرتے ہیں. یوگا مراکز کی تعداد میں بھی اضافہ ہوا ہے ۔ یہ تعداد 2004 میں 14058 تھی جو 2013 میں 26506 پائی گئی۔ یوگا کلاس رومز ہ اور آلات پر لوگ 10.3 بلین ڈالر ہر سال خرچ کر رہے ہیں جو چار سال میں 1.8 گنا بڑھ گیا ہے۔ یوگا کی تربیت کے سلسلہ كورپاور نے امریکہ میں 119 سٹوڈیو کھول رکھے ہیں اور وہ 500 سٹوڈیو کے مقصد کی توسیع کی منصوبہ بندی کر رہا ہے۔

بھارت میں بھی اس کاروبار کا چلن بڑھ رہا ہے۔مقامی یوگا مرکز کھل رہے ہیں اور ایسے ہی ایک یوگا سینٹر چین کے بانی نے ’’دی ہندو ‘‘کو بتایا کہ یہاں ہر طرح کے بازار کا امکان بہت ہے جو قریب 225 بلین ڈالر کا ہو سکتا ہے۔انہوں نے کہا کہ 80 فیصد لوگ جسمانی سرگرمیوں کے لیے آتے ہیں۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ ان میں سے بہت سے اس کے ذریعےروحانی فائدہ بھی چاہتے ہیں۔
جیسے پيزا، کافی اور ای کامرس کے معاملے میں ہے، ویسے ہی آپ حیران نہ ہوں اگر جلدی آپ کو اس بازار میں کوئی امریکی یوگا چین بھی سنائی یا دکھائی دے۔

اگر آپ اس مضمون میں دی گئی معلوماتکو پسند کرتے ہیں تو برائے مہربانی فیس بک پر
کو لائک اور شیئر کریں کیونکہ اس اوروں کو بھی مطلع کرنے میں مدد ملے گی۔

Leave a comment

Your email address will not be published.